تخم ملنگا کو نظر انداز نہ کریں اس کے انمول فوائد جانیں

تخم ملنگا کے بیج تلسی کے بیجوں سے ملتے جلتے ہیں بعض لوگ اسے تلسی کے خاندان کا ہی ایک پودا مانتے ہیں- اس کا اصل نام تخم بلنگا ہے لیکن ہمارے ہاں اسے تخم ملنگا ہی کہتے ہیں- اس لیے ہم اسی لفظ کا استعمال کریں گے-تخم ملنگا کا استعمال ہمارے ہاں بہت کم کیا جاتا ہے اور زیادہ تر لوگ اس کی افادیت سے بھی ناواقف ہیں اسی لیے ہم نے ضروری سمجھا کہ آپ کو تخم ملنگا کے فوائد سے آشنا کروایا جائے-

زیادہ تر تخم ملنگا کا استعمال گرمیوں کے موسم میں شربت وغیرہ میں ملا کر کیا جاتا ہے یا پھر اس کا استعمال فالودہ وغیرہ میں ہوتا ہے کیونکہ اس کے استعمال سے جسم سے گرمی کم ہو جاتی ہے اور ٹھنڈک کا احساس ہوتا ہے- اس کے علاوہ بھی آپ اسے فروٹ، دہی، دودھ، لسی، لیموں پانی اور ملک شیک میں بھی استعمال کر سکتے ہیں اس میں فائبر،فاسفورس، تھایا مین، آئیوڈین، کاربوہائیڈریٹس، زنک، تانبا، چکنائی، وٹامنز اور کیلشیم پایا جاتا ہے اب اس کے فوائد بھی جان لیتے ہیں۔

٭تخم ملنگا ہماری جلد کو جوان رکھتا ہے اس سے بڑھاپے کے آثار دیر سے نمایاں ہوتے ہیں کیونکہ اس میں اینٹی آکسیڈنٹ کی دوگنا مقدار پائی جاتی ہے

شیئر کریں

Leave a comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *